13

 اپوزیشن کی اسٹیئرنگ کمیٹی کے اجلاس میں آج اہم فیصلے متوقع

گزشتہ روز پی ڈی ایم اجلاس میں ارکان قومی و صوبائی اسمبلیوں کو استعفے پارٹی قیادت کو جمع کرانے کی ہدایت کی گئی تھی اور13 دسمبر کو ہر صورت لاہور میں جلسہ کرنے کا اعلان بھی کیا گیا ہے۔

اپوزیشن کی11 جماعتوں نے لانگ مارچ کے وقت کا تعین کرلیا ہے۔

ذرائع کے مطابق حکومت مخالف مارچ جنوری میں ہوگا۔ مولانا فضل الرحمان کا کہنا ہے کہ 31 دسمبر تک تمام اراکین قومی و صوبائی اسمبلی پارٹی قیادت کو استعفے جمع کرائیں گے۔

لانگ مارچ کی تاریخ کا فیصلہ اکتیس دسمبر کو ہی کیا جائے گا۔ مسلم لیگ ن کی اراکین اسمبلی نے اپنے استعفے مرکزی قیادت کو بھیجنا شروع کر دیئے ہیں۔

پاکستان پیپلزپارٹی کے رکن پنجاب اسمبلی علی حیدر گیلانی نے بھی استعفیٰ بلاول بھٹو زرداری کو بھجوادیا ہے۔

اپوزیشن کی جانب سے استعفوں کے فیصلے پر ردعمل دیتے ہوئے ڈاکٹر بابر اعوان نے کہا ہے کہ پی ڈی ایم استعفیٰ استعفیٰ کھیلے گی لیکن دے گی نہیں، جس نے استعفیٰ دینا ہے وہ اسپیکر کے پاس کیوں نہیں جاتا۔

رہنما پی ٹی آئی فرخ حبیب نے بھی کہا کہ اپوزیشن نے استعفے قیادت کو بھجوائے ہیں۔ اپوزیشن کو استعفے اسپیکر قومی اسمبلی کو بجھوانے چاہیے۔

فواد چودہدری نے کہا کہ فضل الرحمان اور مریم نواز جو چاہتے ہیں وہ نہیں ہونا۔ تلخیاں کم کرنے کی ضرورت ہے،مسئلہ جلسوں سے نہیں سمجھ سے حل ہونا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں